بھارتی ریاست بہار ایک دفعہ پھر سیلاب کی لپیٹ میں٣٦ افراد ہلاک ٤ اضلاع کا رابطہ باقی ریاست سے مکمل منقطع ہو گیا

گوہاٹی(ثناء نیوز) بھارتی ریاست بہار کے ضلع سمستی پور کے سیلاب سے متعلق مختلف واقعات میں گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران 8 افراد ڈوب کر ہلاک ہو گئے اطلاعات کے مطابق آسام میں سیلابی پانی میں تاحال 22 سے زائد بچوں کے بہہ جانے کی اطلاع ملی ہے اموات کی بڑھتی ہوئی تعداد پر اظہار تشویش کرتے ہوئے آسام کے وزیر مال بھومی دھر برمن نے کہا ہے کہ اموات کی تعداد میں مزید اضافہ ممکن ہے غیر سرکاری اطلاعات کے مطابق سیلاب سے تاحال 36 افراد ہلاک ہو چکے ہیں جبکہ سرکاری اعداد و شمار کے مطابق19 ہلاکتیں واقع ہوئی ہیں شمال مشرقی بھارت میں آئندہ 24 گھنٹے کے دوران چند مقامات پر بارش یا گرج چمک کے ساتھ چھینٹے پڑنے کا امکان ہے مرکزی آبی کمیشن کے ذرائع کے مطابق دریائے برہم پتر میں گوہاٹی گولپاڑہ اور دھبری کے مقام پر اونچے درجے کا سیلاب ہے ریاست نے سیلاب سے متاثرہ اضلاع کے لئے 12کروڑ 95 لاکھ روپے کی منظوری دی ہے امپھال سے ملنے والی اطلاع کے مطابق منی پور میں سیلاب کی صورت حال ابھی تک سنگین ہے کیونکہ گزشتہ دس دن سے مسلسل بارش جاری ہے سرکاری ذرائع کے مطابق اضلاع توبال امپھال شرقی و غربی اور بشن پور کے 55 ہزار خاندان حالیہ سیلاب کی وجہ سے باقی ریاست سے کٹ کر بہہ گئے ہیں منی پور میں لینڈ سلائیڈنگ کے واقعات اور سڑکوں کے زیر آب آ جانے کی وجہ سے باقی دنیا سے کٹ گیا عوام کو سیلاب کی وجہ سے سخت مشکلات کا سامنا ہے پہاڑی سڑکوں پر تعمیر شدہ مکانات کی دیواروں میں شگاف پڑ گئے ہیں اور انہیں ناقابل رہائش قرار دے دیا گیا ہے

Share

Leave a Reply