ایمرجنسی اور پی سی او کے بعد سپریم کورٹ کو صدر مشرف اہلیت کیس کی سماعت نئے سرے سے کرنا ہوگی‘ اٹارنی جنرل

اسلام آباد ۔ اٹارنی جنرل آف پاکستان جسٹس (ر) ملک محمد قیوم نے کہا ہے کہ ایمرجنسی اور پی سی او کے بعد صدر جنرل پرویز مشرف کی اہلیت کیس کی سماعت سپریم کورٹ کو نئے سرے سے کرنا ہوگی تاہم سپریم کورٹ کے حکم کے مطابق الیکشن کمیشن آف پاکستان صدارتی انتخاب کے جیتنے والے امیدوار کا اعلان اس وقت تک نہیں کرسکتا جب تک سپریم کورٹ صدر جنرل پرویز مشرف اہلیت کیس کا فیصلہ نہیں کردیتی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے آئی این پی سے ٹیلی فونک گفتگو کے دوران کیا انہوں نے کہا کہ صدر جنرل پرویز مشرف کیس کی سماعت کے دوران چار جسٹس صاحبان پہلے بھی موجود تھے اب بھی موجود ہیں اس لئے وہ تو نئے بینچ میں شامل ہوں گے تاہم لارجر بینچ میں شامل کئے جانے والے نئے ججوں کو چونکہ مذکورہ کیس کے حوالے سے کسی بھی قسم کی کوئی معلومات نہیں ہیں اور نہ ہی انہیں پہلے سے جاری سماعت کے بارے میں کوئی علم ہے اس لئے انہیں اس کیس کی سماعت نئے سرے سے کرنا ہوگی ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ کیس کی سماعت کے دوران درخواست گزار کے وکلاء کو دلائل دینے کے لئے نوٹس جاری کئے جائیں گے۔

Share

Leave a Reply