Urdu News

Urdu News…The 3rd Largest Online Urdu Newspaper

Urdu News header image 4

Entries from March 31st, 2010

نئی تاریخ رقم ‘ 18ویں ترمیم کیلئے باضابطہ طورپر آئینی اصلاحات پر اتفاق کر لیا گیا ‘ ترمیمی مسودے پر دستخط کر دئیے گئے

March 31st, 2010 · Comments Off · بریکنگ نیوز, پاکستان

پارلیمانی کمیٹی برائے آئینی اصلاحات نے 18ویں ترمیم کیلئے باضابطہ طورپر آئینی اصلاحات پر اتفاق کر لیا
صوبہ سرحد کا نیا نام خیبر پختونخوا رکھنے، اعلیٰ عدلیہ میں ججز کی تقرری کیلئے جوڈیشل اور پارلیمانی کمیشن قائم کرنے کی تجویز
کمیٹی کے اراکین نے ترمیمی مسودے پر دستخط کر دئیے

اسلام آباد ‘ پارلیمانی کمیٹی برائے آئینی اصلاحات نے 1973ء کے آئین میں18ویں ترمیم کیلئے باضابطہ طورپر آئینی اصلاحات کا اعلان کر دیاہے۔ ترامیم کے متعلق تاریخی دستاویز پر دستخط کر دئیے گئے ہیں ۔ ترامیم کے مسودے پر دستخط کی تقریب بدھ کی شب پارلیمنٹ ہاؤس میں منعقد ہوئی۔ پارلیمانی آئینی کمیٹی کے 77ویں اجلاس میں آئینی اصلاحات کو حتمی شکل دی گئی ۔پیپلز پارٹی کے علاوہ دیگر تمام جماعتوں نے بھی 20سے 25 اختلافی نوٹ لکھے۔ دستاویز پر چیئرمین کمیٹی سینیٹر میاں رضا ربانی ، پاکستان پیپلز پارٹی کی جانب سید نوید قمر ، بابر اعوان ، سید خورشید شاہ ، راجہ پرویز اشرف ،سنیٹر نواب لشکر رئیسانی ، پاکستان مسلم لیگ (ن) کی جانب سے سینیٹر اسحاق ڈار، احسن اقبال ، سردار مہتاب احمد خان ، زاہد حامد ، مسلم لیگ (ق) کی جانب سے سینیٹر وسیم سجاد ، سینیٹر ایس ایم ظفر ، ہمایوں سیف اللہ خان ، عوامی نیشنل پارٹی کے سینیٹر حاجی عدیل ، سینیٹر افرا سیاب خٹک ، متحدہ قومی موومنٹ ڈاکٹر فاروق ستار ، حیدر عباس رضوی ، جمعیت علماء اسلام (ف) کی جانب سے رحمت اللہ کاکڑ ، جماعت اسلامی کی جانب سے سینیٹر پروفیسر خورشید احمد ، پیپلز پارٹی شیر پاؤ آفتاب احمد خان شیر پاؤ،جمہوری وطن پارٹی کے سینیٹر شاہد حسن بگٹی ، نیشنل پارٹی کے سینیٹر ڈاکٹر عبدالمالک بلوچ ، بلوچستان نیشنل پارٹی ( عوامی ) کے اسرار اللہ زہری ، مسلم لیگ فنکشنل کے جسٹس (ر) عبدالرزاق تھہیم ، پختونخوا ملی عوامی پارٹی کے سینیٹر عبدالرحیم مندو خیل اور فاٹا کے منیر خان اوکزئی نے دستخط کئے۔ پارلیمانی آئینی کمیٹی کے کل 77اجلاس ہوئے ۔ پارلیمانی کمیٹی نے 9ماہ تک 10دن میں اپنا کام مکمل کیا۔ کمیٹی کا اعلان اسپیکر قومی اسمبلی ڈاکٹر فہمیدہ مرزا نے 21جون 2009ء کو کیا تھا کمیٹی کے قیام کیلئے اپریل 2009ء میں پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں سے قرار دادیں منظور کی گئیں تھیں ۔ آغاز میں کمیٹی کے 27اراکین کا نوٹیفکیشن جاری کیا گیاتھا تاہم قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف چوہدری نثار علی خان نے کمیٹی میں شامل ہونے سے انکار کر دیا تھا۔ اس طرح 26رکنی کمیٹی نے آئین میں 95ترامیم تجویز کی ہیں۔ پارلیمانی آئینی کمیٹی نے سترہویں ترمیم ، اٹھاون ٹو بی کی منسوخی کی سفارش کی ہے۔اسی طرح صوبائی خود مختاری کیلئے کنکرنٹ لسٹ کو منسوخ کرنے کیلئے آئین میں ترمیم تجویز کی گئی ہے۔آئینی اصلاحات کے تحت فوج میں اعلیٰ تقرریوں کے اختیارات وزیراعظم کو حاصل ہو جائیں گے، اعلیٰ عدلیہ میں ججز کی تقرری کیلئے جوڈیشل اور پارلیمانی کمیشن قائم ہوں گے۔ جوڈیشل کمیشن 7اراکین جبکہ پارلیمانی کمیشن 8اراکین پر مشتمل ہوں گے ۔ کمیٹی نے جوڈیشل کمیشن کے ساتویں رکن کی نامزدگی کا اختیار چیف جسٹس آف پاکستان کو دے دیا ہے ۔ صوبہ سرحد کیلئے ’’ خیبر پختونخوا ‘‘ کے نام پر اتفاق کیاگیا ہے ۔پارلیمنٹ کی بالادستی کے حوالے سے دیگر سفارشات بھی مسودے کا حصہ ہیں آئینی اصلاحات کی دستاویزات پر دستخط کرنے کے بعد سینیٹر میاں ربانی نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے اٹھارہویں ترمیم کے متفقہ مسودے پر قوم اور پارلیمنٹ کو مبارک باد دی

Tags:

میر پور بار کے انتخابات میں بڑے بڑے سیاسی برج الٹ گئے

March 31st, 2010 · Comments Off · پاکستان

اعلیٰ عدلیہ،چوہدری عبد المجید،عبدالمجید ملک اور دیگر کا حمایت یافتہ پینل بری طرح شسکت ہار گیا
رزاق کشمیری پینل کلین سویپ کرگیا،فاتح پینل کی ریلی،چیف جسٹس آف پاکستان کے حق میں نعرے بازی
میر پور ‘ آزاد کشمیر کی سب سے بڑی بار میر پور کے انتخابات میں بڑے بڑے سیاسی برج الٹ گئے ۔ اعلیٰ عدلیہ، پاکستان پیپلزپارٹی آزاد کشمیر کے صدر چوہدری عبد المجید،سابق چیف جسٹس آزاد کشمیر ہائی کورٹ عبد المجید ملک،وائس چیئر مین آزاد کشمیر بار کونسل چوہدری محمد ممتاز ایڈووکیٹ، صدر بار خالد یوسف کا حمایت یافتہ پینل بری طرح شسکت کھا گیا۔ رزاق کشمیری کے پینل نے کلین سویپ کر دیا۔ جیتنے والے گروپ کی ریلی،چیف جسٹس پاکستان افتخار محمد چوہدری کے حق میں نعرے بازی،تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ بار میر پور کے الیکشن میں زراق کشمیری (صدر) 187 ووٹ ، ریاض احمد لجپال209(سینئر نائب صدر)، مرزا حامد روف (نائب صدر)166 ووٹ، چوہدری شوکت نائب صدر 212 ووٹ، آصف اعظم میر جنرل سیکرٹری 188ووٹ، بابر کمال جوائنٹ سیکرٹری 201ووٹ، بابر حسین سیکرٹری مالیات نے 212 ووٹ حاصل کیے جبکہ شکست کھانے والے گروپ کے صدارتی امید وار خالد رشید نے 153ووٹ، محمد طاہر خان امیدوار سنیئر نائب صدر129ووٹ،چوہدری یاسر 162ووٹ، ارشد ذکی 127 ووٹ، سردار واجد پرویز 147 ، محمد فیاض چوہدری 133، چوہدری راشد رشید 125 ووٹ لے سکے ۔ چیف الیکشن کمشنر کے فرائض سر انجام دینے والے صدر بار خالد یوسف ایڈووکیٹ نتائج کا اعلان کیا۔ فاتح پینل رزاق کشمیری کی قیادت میں نتائج کے اعلان کے بعد احاطہ کچری سے ریلی نکالی جو کہ چوک شہداں کا چکر لگانے کے بعد مقامی ہوٹل میں پہنچی جس سے صدر بار زراق کشمیری ایڈووکیٹ ، عالم اعظم میر و دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اب وکلاء کے ساتھ کوئی زیادتی برداشت نہیں کی جائے گی اور وکلاء کے مسائل حل کیے جائیں گے ۔ وکلاء کی ریلی میں آزاد کشمیر بار کونسل کے ممبران و سینئر وکلاء کی بڑی تعداد موجود تھی

Tags: ·

زرداری کے خلاف سوئس مقدمات دربارہ کھولنے کی پاکستانی حکومت کی درخواست موصول نہیں ہوئی:پبلک پرا سیکیوٹر

March 31st, 2010 · Comments Off · بریکنگ نیوز, پاکستان

برن۔سوئٹزرلینڈ کے پبلک پرا سیکیوٹر نے کہا ہے کہ پاکستانی حکومت کی جانب سے صدر آصف علی زرداری کے خلاف سوئس مقدمات دربارہ کھولنے کی کوئی درخواست موصول نہیں ہوئی۔ پراسیکیوٹر جنرل ڈینیل ویپل نے کہا ہے کہ صدر زرداری کو پاکستان میں مقدمات سے استثنیٰ حاصل ہے اور پاکستان کی طرف سے انہیں صدر زرداری کے خلاف مقدمات دوبارہ کھولنے کے لئے کوئی درخواست موصول نہیں ہو ئی جبکہ ادھر نیب نے صدر آصف علی زرداری کے خلاف سوئس مقدمات دوبارہ کھولنے کے لئے سوئس حکام کو خط ارسال کر دیا ہے ۔واضح رہے کہ این ار او کے فیصلے پر عملدرآمد کے بارے میں تحریری رپورٹ پر سپریم کورٹ میں پیش کر دی گئی چیف جسٹس کاکہناہے کہ عدالتی فیصلے پر من وعن عمل ہونا چاہئے

Tags:

وفاقی وزیر رجہ پرویز اشرف کی رکنیت ہائی کورٹ میں چیلنج

March 31st, 2010 · Comments Off · بریکنگ نیوز, پاکستان

قوم سے جھوٹ بولتے رہے آئین کی دفعہ 62، 63 پر پورا نہیں اترے وزارت سے مستعفی ہوں اور اسمبلی رکنیت ختم کی جائے ۔ درخواست گزار

لاہور۔وفاقی وزیر پانی و بجلی راجہ پرویز اشرف کی وزارت اور رکنیت کو لاہور ہائی کورٹ میں چیلنج کر دیا گیا ۔ لاہور ہائی کورٹ میں دائر کی جانے والی درخواست میں ڈاکٹر فاروق حسن نے موقف اختیار کیا ہے کہ وفاقی وزیر پانی و بجلی قوم سے مسلسل جھوٹ بولتے رہے اور وعدے پورے نہیں کئے وہ آئین کی دفعہ 62 ، 63 پر پورا نہیں اترے اس لئے وہ اپنی ومارت سے استعفے دیں اور ان کی قومی اسمبلی کی رکنیت معطل کی جائے ۔ راجہ پرویز مشرف کے خلاف اس درخواست کی سماعت کیلئے منظور یا مسترد کئے جانے کا فیصلہ کل ہائی کورٹ کرے گی ۔ درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ راجہ پرویز اشرف نے بار بار بیان دیئے کہ 31 دسمبر 2009 ء تک ملک کو بجلی کی لوڈ شیڈنگ سے پاک کر دیا جائے گا لیکن وہ ایسا نہیں کر سکے ۔

Tags:

نیب کے پراسیکوٹر جنرل دانشور ملک کو برطرف کر دیا گیا

March 31st, 2010 · Comments Off · بریکنگ نیوز, پاکستان

اسلام آباد۔سپریم کورٹ کے این آر او کے کالعدم قرار دیئے جانے والے فیصلے پر عملدرآمد کرتے ہوئے چیئر مین نیب نویدا حسن نے نیب نے پراسیکوٹر جنرل دانشور ملک کو ملازمت سے برطرف کر دیا ہے ۔ پراسیکوٹر جنرل کو منی لانڈرنگ کیس کے صحیح کاغذات اور معلومات عدالت میں فراہم نہ کرنے پر سپریم کورٹ نے اپنے 16 دسمبر کے فیصلے میں ملازمت سے برطرف کرنے کا حکم دیا تھا جس پر عملدرآمد کرتے ہوئے چیئر مین نیب نے دانشور ملک کو ملازمت سے برطرف کر دیا ہے۔

Tags:

عوام کی خدمت مسلم لیگ (ن) کا اوڑھنابچھونا ہے تمام وسائل عوام کی فلاح و بہبود پر صرف کئے جا رہے ہیں ۔ شہباز شریف

March 31st, 2010 · Comments Off · پاکستان

٭۔ ۔ ۔ تعلیم کو فروغ دیئے بغیر ملک کی تیز رفتار ترقی کا خواب شرمندہ تعبیر نہیں ہوسکتا،جامع پروگرام کے تحت اربوں روپے خرچ کئے جار ہے ہیں

لاہور۔وزیر اعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف نے کہا ہے کہ عوام کی خدمت پاکستان مسلم لیگ (ن) کا اوڑھنابچھونا ہے اور تمام وسائل عوام کی فلاح و بہبود پر صرف کئے جا رہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ صوبے کی تیز رفتار ترقی‘ عوام کے معیار زندگی میں بہتری لانے اور انہیں بنیادی سہولتوں کی فراہمی کے لئے انقلابی اقدامات کئے جا رہے ہیں۔ جامع پروگرام کے تحت تعلیم ‘ صحت ‘سماجی ترقی کے اوردیگر شعبوں کی بہتری پر اربوں روپے خرچ کئے جا رہے ہیں ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے پاکستان مسلم لیگ (ن) امریکہ کے وفد سے ملاقات کے دوران کیا جس نے امجد نواز کی قیادت میں آج یہاں ان سے ملاقات کی۔ وزیر اعلیٰ محمد شہباز شریف نے وفد سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ غربت‘ جہالت ‘ بیروزگاری کا خاتمہ اور عوام کو انصاف کی فراہمی پاکستان مسلم لیگ (ن) کا منشور ہے اور اس مقصد کے لئے تمام تر توانائیاں بروئے کار لائی جا رہی ہیں۔انہوں نے کہا کہ تعلیم کو فروغ دیئے بغیر ملک کی تیز رفتار ترقی کا خواب شرمندہ تعبیر نہیں ہوسکتا۔ اس لئے پنجاب حکومت نے تعلیمی شعبے کی ترقی‘ شرح خواندگی بڑھانے ‘ تعلیم عام کرنے اور نوجوان نسل کو جدید علوم سے آراستہ کرنے کے لئے ٹھوس اقدامات کئے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ پانچ ارب روپے کی لاگت سے چار ہزار سے زائد سکولوں میں آئی ٹی لیبز قائم کر کے تعلیمی شعبے میں انقلاب کی بنیاد رکھ دی گئی ہے اور آئندہ اس کا دائرہ کار مڈل سکولوں تک بڑھایا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ صوبے کے پسماندہ اور دور دراز علاقوں کے طلبا و طالبات کے لئے دانش سکول قائم کئے جا رہے ہیں جن کا معیار ملک کی معیاری درسگاہوں سے بڑھ کر ہوگا۔ انہوں نے کہاکہ علم و دانش کے ان گہواروں میں نہ صرف طلبا و طالبات کو معیاری تعلیمی سہولیات میسر آئیں گی بلکہ انہیں قیام و طعام کی بھی مفت سہولت حاصل ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ ہونہار غریب طلبا و طالبات کو اپنا تعلیمی سلسلہ مکمل کرنے میں معاونت کے لئے پنجاب ایجوکیشنل انڈومنٹ فنڈ سے وظائف کی فراہمی جاری ہے اور اب لمز ‘ فاسٹ اور نسٹ جیسے اعلیٰ تعلیمی اداروں کو بھی اس پروگرام میں شامل کیا گیا ہے جبکہ آئی وی لیگ یونیورسٹیوں میں اعلیٰ تعلیم کے لئے پانچ طلباء کو وظائف کی فراہمی کا پروگرام بھی بنایا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ترقی یافتہ ممالک نے فنی تعلیم کو فروغ دے کر ہی ترقی کی منازل تیزی سے طے کی ہیں اور ہمارا مستقبل بھی فنی تعلیم سے ہی وابستہ ہے اسی لئے پنجاب حکومت نے فنی تعلیم کے فروغ کو اپنی اولین ترجیح بنایا ہے۔انہوں نے کہا کہ مارکیٹ کی ضروریات کے مطابق ہنرمند افرادی قوت تیار کرنے کے لئے نہ صرف فنی تعلیم کے کورسز کو جدید تقاضوں سے ہم آہنگ کیا جا رہا ہے بلکہ فنی تعلیم کے ادارے ٹیوٹا کو بھی مکمل خود مختار اور فعال بنایا گیا ہے ۔ جرمنی‘ سویڈن اور دیگر ممالک سے فنی تعلیم کے فروغ کے حوالے سے بھی تعاون حاصل کیا جا رہا ہے۔وزیر اعلیٰ نے بتایا کہ عوام کو صحت کی جدیدو معیاری سہولتوں کی فراہمی پربھی خطیر وسائل صرف کئے جا رہے ہیں ۔ ہسپتالوں میں ڈائیلسز اور ادویات کی مفت فراہمی کے ساتھ ساتھ ملک کی تاریخ میں پہلی مرتبہ عام آدمی کو ریلیف کی فراہمی کے لئے ہسپتالوں میں ایئر کنڈیشنرز اور جنریٹرز بھی نصب کئے گئے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ معیاری انفراسٹرکچر معاشی سرگرمیوں کے فروغ کے لئے بے حد اہمیت کا حامل ہے اس لئے اس شعبے کی ترقی پر خصوصی توجہ مرکوز کی گئی ہے ۔انہوں نے کہا کہ زراعت کو ہماری معیشت میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت حاصل ہے اور ہماری آبادی کے 70 فیصد کا روز گار اسی شعبہ سے وابستہ ہے ۔انہوں نے کہا کہ پنجاب حکومت صوبے میں زراعت کے فروغ کے لئے جدید ٹیکنالوجی کو بروئے کار لا رہی ہے اور گزشتہ برس کی طرح امسال بھی کاشتکاروں کو نہایت شفاف طریقے سے قرعہ اندازی کے ذریعے 10 ہزارگرین ٹریکٹر فراہم کئے گئے ہیں جبکہ زرعی آلات بھی رعایتی نرخوں پر فراہم کئے جا رہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ صوبے میں کرپشن فری کلچر کو فروغ دیا گیا ہے اور قیاتی منصوبوں کی بروقت‘ شفاف اور معیاری تکمیل کو یقینی بنایا جا رہا ہے اور تمام تمام ترقیاتی منصوبوںکے لئے تھرڈ پارٹی آڈٹ سسٹم کو لازمی قرار دیتے ہوئے ایک ایک پائی عوام کی خوشحالی اور انہیں ریلیف کی فراہمی پر خرچ کی جا رہی ہے۔وفد نے صوبے کی ترقی اور عوام کی فلاح و بہبود کے لئے کئے گئے اقدامات پر وزیر اعلیٰ پنجاب کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ ترقی و خوشحالی کے لئے وزیر اعلیٰ کی کاوشیں لائق تحسین ہیں ۔وزیر اعلیٰ سے ملاقات کرنے والے وفد میں جاوید صدیقی ‘ ڈاکٹر محمد اسلم ‘ حاجی منشاء کھوکھر اور ملک اکبر علی شامل تھے۔

Tags:

ٹی 20-ورلڈ کپ ، قومی ٹیم متحد ہو کر کھیلے ۔ ۔ ۔ اعجاز بجٹ

March 31st, 2010 · Comments Off · سپورٹس

لاہور۔پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین اعجاز بٹ نے قومی اسکواڈ کو ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ میں متحد ہو کر کھیلنے کی ہدایت کی ہے جبکہ کھلاڑیوں کو مینجر کی اجازت کے بغیر میڈیا کے ساتھ بات کرنے سے روک دیا گیا۔چیئرمین پی سی بی نے نیشنل کرکٹ اکیڈمی لاہور میں ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کے لئے پندرہ رکنی اسکواڈ سے ملاقات کی۔ اس موقعے پر انہوں نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کوئی کھلاڑی مینجر کے اجازت کے بغیر میڈیا سمیت کسی غیر متعلقہ شخص سے بات نہ کرے جبکہ کپتان سمیت کسی بھی کھلاڑی کی کارکردگی پر نکتہ چینی نہیں کی جائے گی۔چیئرمین نے سنٹرل کنٹریکٹ سمیت کھلاڑیوں کے مسائل حل کرنے کے لئے دو کھلاڑیوں اور ٹیم مینجمنٹ پر مشتمل ایک کمیٹی بنانے کا اعلان کیا جو بورڈ اور کھلاڑیوں میں رابطے کے فقدان کو دور کرے گی۔ اعجاز بٹ کا کہنا تھا کہ تمام کھلاڑی ہار جیت کو ذہنوں سے نکال کر میدان میں کارکردگی دکھائیں تو فتح ان کا مقدر ہو گی۔

Tags:

ترکی سے تمام شعبوں، عوامی روابط کو فروغ دینا چاہتے ہیں، صدر زرداری

March 31st, 2010 · Comments Off · بریکنگ نیوز, پاکستان

پاکستان کی اقتصادی حالت کو مستحکم بنانے کیلئے مکمل تعاون فراہم کرنا چاہیے، ترک صدر

اسلام آباد۔صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ پاکستان ترکی کے ساتھ دفاع تجارت ، زراعت اور انفراسٹرکچر کے شعبوں اور عوام سے عوام کے درمیان روابط کو فروغ دینا چاہتا ہے۔اسلام آباد میں ترکی کے صدر عبداللہ گل کے ہمراہ نیوز کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے صدر مملکت نے کہاکہ دونوں ملکوں کے درمیان مختلف شعبوں میں تعاون کے جو معاہدے ہوئے ہیں ان سے ہمارے تعلقات مزید فروغ پائیں گے۔صدر آصف علی زرداری نے کہا کہ پاکستان اور ترکی دہشت گردی کی سخت مذمت کرتے ہیں۔ حکومت پاکستان دہشت گردی کے خاتمے کیلئے پر عزم ہے اور اسے عوام کی مکمل حمایت حاصل ہے۔ایک سوال کے جواب میں صدر مملکت نے کہاکہ پاکستان اور ترکی اس بات پر متفق ہیں کہ افغانستان میں امن خطے کے ساتھ ساتھ دنیا کے امن اور استحکام کے لئے بھی ضروری ہے۔ترکی کے صدر عبداللہ گل نے کہاکہ ہمارے دکھ سکھ مشترک ہیں ترکی پاکستان کے مسائل کو اپنے مسائل سمجھتا ہے ہم پاکستان میں جمہوریت کا استحکام چاہتے ہیں ترکی کیلئے مستحکم پاکستان بے حد اہمیت کا حامل ہے۔انہوں نے کہاکہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ہم پاکستان کی مکمل حمایت کرتے ہیں۔عالمی برادری کو بھی پاکستان کی مکمل حمایت کرنی چاہیے اور پاکستان کی اقتصادی حالت کو مستحکم بنانے کیلئے مکمل تعاون فراہم کرنا چاہیے۔ترک صدر نے کہاکہ دونوں ملکوں کے درمیان تعاون کے وسیع مواقع ہیں،ہم نے ریلوے کے شعبے میں تعاون بڑھانے پر بھی بات چیت کی ہے۔دریں اثناء ترکی کے صدر عبداللہ گل اور صدر آصف علی زرداری کے درمیان باضابطہ مذاکرات اسلام آباد میں ہوئے جس میں دونوں ملکوں کے درمیان مختلف شعبوں میں تعاون بڑھانے اور خطے کی صورتحال پر خاص طور پر غور کیا گیا۔دونوں رہنماؤں کے درمیان ون آن ون ملاقات بھی ہوئی جس میں دونوں ملکوںکے درمیان اقتصادی تعلقات اور سرمایہ کاری پر خصوصی طور پر توجہ دی گئی۔پاکستان اور ترکی کے درمیان مختلف شعبوں میں تعاون کیلئے مفاہمت کی تین دستاویزات پر دستخط کئے گئے۔ دستخط کرنے کی تقریب میں ایوان صدر مشترکہ سرمایہ کاری اور منصوبہ بندی سے متعلق مفاہمت کی یاداشت پر مشیر خزانہ حفیظ شیخ اور ترکی کے وزیر خزانہ نے دستخط کئے۔زرعی صنعت سے متعلق مفاہمت کی یاداشت پر ترکی کے وزیر زراعت اور ان کے پاکستانی ہم منصب نذر گوندل نے دستخط کئے۔ پاکستان اور ترکی کے سرمایہ کاری بورڈز کے درمیان تعاون کیلئے مفاہمت کی یاداشت پربھی دستخط کئے گئے ۔

Tags:

سپریم کورٹ نے نیب کی اپیل آگسٹا آبدوز کمیشن کیس کھولنے کا حکم دے دیا

March 31st, 2010 · Comments Off · پاکستان

اسلام آباد۔سپریم کورٹ نے آگسٹا آبدوز کمیشن کیس میں عامر لودھی کے خلاف نیب کی طرف سے دائر کی گئی مقدمہ بحالی کی اپیل منظور کرتے ہوئے مقدمہ ہائی کورٹ میں چلانے کا حکم دے دیا۔چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے بنچ نے آگسٹا آبدوز کمیشن کیس میں نیب کی اپیل پر سماعت کی ۔ عامر لودھی کے وکیل کا سماعت کے دوران کہنا تھا کہ ان کے موکل چونکہ سرکاری ملازمین نہیں ہیں اور انھوں نے این آر او کا فائدہ بھی نہیں لیا اس لیے ان کے خلاف مقدمہ نہیں کھولا جا سکتا ۔ واضح رہے کہ اس کمیشن کیس میں پاک بحریہ کے سابق سربراہ منصورالحق ، پلی بارگین کرکے رہا ہوئے تھے ،، مقدمہ کے شریک ملزم عامر لودھی کے خلاف مقدمہ بحالی کی اپیل پر سپریم کورٹ نے فیصلہ سناتے ہوئے ، ریفرنس کا بحال کردیا اور یہ کیس ہائی کورٹ میں زیر سماعت لانے کا حکم بھی سنایا۔

Tags:

جاپان بجلی کی ترسیل کے نظام کی بہتری کے لیے پاکستان کو 26 کروڑ ڈالر کاقرضہ دے گا معاہدے پر دستخط ہو گئے

March 31st, 2010 · Comments Off · پاکستان

اسلام آباد۔جاپان کی حکومت پاکستان کو نیشنل ٹرانسمیشن لائنز اورگرڈسٹیشنز کی استعداد بڑھانے کے منصوبے کے لئے 26 کروڑ ڈالر کا زم شرائط پر قرضہ دے گا۔ حکومت پاکستان کی جانب سے سیکرٹری اقتصادی امور ڈویژن سبطین فضل حلیم جبکہ جاپان کی طرف سے جاپانی سفیر نے معاہدے پر دستخط کیے۔پاکستان کو30 سال کی مدت میں یہ قرضہ واپس کرنا ہو گا جبکہ پہلی قسط دس سال کے بعد شروع ہو گی۔ پاکستانکو اس قرضے کے لئے 1.2 فیصد سالانہ شرح سود ادا کرنا پڑے گا۔اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے سیکرٹری اقتصادی امور ڈویژن نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ گرڈ سٹیشنز کی استعداد کار بڑھانے کے منصوبے کا مقصد موجودہ گرڈ سیشنز کو اپ گریڈ کر کے اس کی پیداوار پنجاب اور سندھ میں بالترتیب 500 کے وی اور220 کے وی بڑھانا ہے ۔ انھوں نے کہا کہ اس منصوبے سے چشتیاں میں 220 کے وی، گجرات میں 22 کے وی ، لاہور اور شیخپورہ میں 500سو کے وی کے ٹرانسمیشن لائنز کو اپ گریڈ کیا جائے گا۔انھوں نے کہا کہ پاکستان اس وقت نہ صرف توانائی کی قلت کا شکار ہے بلکہ اس کی ٹرانسمیشن لائنز سسٹم بھی کافی فرسودہ ہے ۔انھوں نے نرم شرائط پر قرضے کی قراہمی پر حکومت جاپان کا شکریہ ادا کیا ۔اس موقع پر پاکستان میںتعینات جاپان کے سفیر سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اس منصوبے کی تکمیل کے بعد پاکستان کے موجودہ سسٹم سے 156 میگا واٹ اضافی بجلی حاصل ہو گی جو سالانہ 20 لاکھ آبادی کے لیے بجلی کی ضرورت کے برابر ہے ۔انھوں نے کہا کہ ان کی حکومت پاکستان میں بجلی کے بحران کو ختم کرنے میں مدد دینا چاہتی ہے ۔ اس وقت تک جاپان کی حکومت نے توانائی کے شعبے میں نرم شرائط پر قرض کی 17 منصوبوں پر عملدرآمد کر چکی ہے ۔

Tags: ·