امریکہ نے ایٹمی سائنسدان کو اغواء کیا ہے ‘ شواہد سوئٹرز لینڈ کے حوالے کر دیئے ہیں ‘ ایران

تہران میں سوئٹرز لینڈ کے سفارتخانے نے کوئی ردعمل ظاہر نہیں کیا
امریکہ کی طرف سے بھی کوئی تبصرہ سامنے نہیں آیا
تہران ‘ ایران نے کہا ہے کہ اس نے امریکہ کے ہاتھوں اپنے جوہری سائنسدان شاہ رام امیری کی سعودی عرب سے اغواء کے متعلق شواہد سوئٹرز لینڈ کے حوالے کر دیئے ہیں ۔ ایران نے کہا ہے کہ اس نے تہران میں سوئٹزرلینڈ کے سفارت خانے کو کچھ ایسے شواہد دیئے ہیں جن سے یہ ثابت ہوتا ہے کہ امریکہ نے اس کے جوہری سائنسدان شاہ رام امیری کو اغوا کیا تھا۔ایران الزام لگاتا رہا ہے کہ امریکہ نے ایک سال قبل ایرانی سائنسدان شاہ رام امیری کو سعودی عرب سے اغواء کیا تھا۔ تہران میں سوئٹزرلینڈ کا سفارت خانہ امریکی مفادات کی نمائندگی کرتا ہے۔تہران میں سوئٹزرلینڈ کے سفارت خانے نیایرانی دستاویزات کی وصولی کے حوالے ابھی تک کوئی ردعمل ظاہر نہیں کیا ہے۔ امریکہ نے بھی کوئی تبصرہ نہیں کیا ہے۔ایران کا کہنا ہے کہ امریکہ نے اس کے جوہری سائنسدان شاہ رام امیری کو ایک سال پہلے سعودی عرب سے اغوا کیا تھا جہاں وہ حج یا عمرہ کی غرض سیگئے تھے۔ شاہ رام امیری پچھلے ایک سال سے لاپتہ ہیں اور خیال کیا جاتا ہے کہ وہ امریکہ میں ہیں۔حالیہ دنوں میں شاہ رام امیری کی تین متضاد ویڈیو سامنے آئی ہیں۔ پہلی ویڈیو میں شاہ رام امیری الزام لگاتے ہوئے نظر آتے ہیں کہ انہیں حجاز مقدس سے سعودی اور امریکی ایجنٹوں نے اغواء کیا اور تشدد کے ذریعے انہیں یہ کہنے پر مجبور کیا کہ وہ خود ایران سے بھاگ کر امریکہ پہنچے ہیں۔دوسری ویڈیو میں شاہ رام امیری یہ کہتے ہیں کہ وہ اپنی مرضی سے امریکہ آئے ہیں اور وہ امریکہ ریاست ایریزونا میں مقیم ہیں۔ تیسری ویڈیو میں، جو ایرانی ٹیلی ویڑن پر نشر کی گئی، شاہ رام امیری اپنی دوسری ویڈیو کی تردید کرتے ہوئے کہتے ہیں اور کہتے ہیں کہ وہ سب جعلی ہے اور وہ امریکی حراست سے فرار ہونے میں کامیاب ہو چکے ہیں۔ بی بی سی کے مطابق ایرانی حکومت کا نیا بیان شاہ رام امیری واقعے میں ایک نیا موڑ ہے۔ یہ انٹیلی جنس ایجنسیوں کی لڑائی ہے جس میں ہر کوئی یہ ثابت کرنے کی کوشش کر رہا ہے کہ وہ دوسرے سے ایک قدم آگے ہے۔ماضی میں امریکہ سختی سے تردید کرتا رہا ہے کہ اس نے ایران کے سائنسدان کو اغواء کیا تھا۔ البتہ امریکہ نے ایرانی سائنسدان کی امریکہ میں موجودگی کے حوالے سے کچھ کہنے سے گریز کیا ہے۔ایک امریکی خبررساں ادارے نے اپنی ایک حالیہ رپورٹ میں کہا تھا کہ ایرانی سائنسدان خود بھاگ کر امریکہ پہنچے ہیں اور وہ ایران کے جوہری پروگرام کے حوالے سے سی آئی آے سے مکمل تعاون کر رہے ہیں۔ایرانی ذرائع ابلاغ کے مطابق شاہ رام امیری تہران یونیورسٹی میں بطور تحقیق کار کے کام کرتے ہیں لیکن کچھ دوسری رپورٹوں کے مطابق شاہ رام امیری ایران کی اٹامک انرجی آرگنائزیشن کے لیے کام کرتے ہیں اور وہ ایران کے جوہری پروگرام کے بارے میں وسیع معلومات رکھتے ہیں۔

Share

1 Comment to "امریکہ نے ایٹمی سائنسدان کو اغواء کیا ہے ‘ شواہد سوئٹرز لینڈ کے حوالے کر دیئے ہیں ‘ ایران"

  1. شاہد مسعود احمد's Gravatar شاہد مسعود احمد
    July 9, 2010 - 1:15 am | Permalink

    امریکہ امریکہ ھے اس نے ھمارے سارے ملک کو اغوا کیا ھوا ھے ھم نے کیا کرلیا ہے جو ایران کرلے گا اس نے ھمارے ڈاکڑ قدیر خان کو عبرت بنا دیا ھمارے ھیرو کو زیرو بنا دیا جو چور اچکے تھا غنڈے بدمعاش تھے ان کو ھمارا حکمران بنا دیا ھے ھم نے کیا کر لیا ہے جو ایران کرلے گا اس نے ھماری مسجدوں درباروں یونیورسٹیوں اور اسکولوں کو دھماکوں سے اُڑا دیا ہے ھم نے کیا کر لیا ہے جو ایران کرلے گا اس نے ھمارا جینا حرام کر دیا ھے ھم نے اُس کا کیا کر لیا ہے جو ایران کرلے گا وہ جب چاہے جیسے خرید لے جب چاہے ڈالر دے کر پاکستان اور اسالم کےخلاف اسے ستعمال کرلے ھم نے کیا کر لینا ہے جو …. ایران کرلے گا

Leave a Reply