Urdu News

Urdu News…The 3rd Largest Online Urdu Newspaper

Urdu News header image 4

Entries Tagged as 'pakistan'

وزیراعظم نے نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ کونسل کے قیام کا اعلان کر دیا

August 19th, 2010 · No Comments · پاکستان

اسلام آباد‘ وزیراعظم یوسف رضا گیلانی نے نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ کونسل کے قیام کا اعلان کر دیا ہے ۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی کی زیر صدارت آج یہاں ایک اہم اجلاس منعقد کیا گیا جس میں چاروں صوبوں کے وزرائے اعلی، وزیر اعظم آز اد جموں کشمیر، گورنر گلگت بلتستان، گورنر خیبر پختونخواہ، چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی، مسلح افواج کے سربراہان کے علاوہ این ڈی ایم سی کے سربراہ شریک ہوئے۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نےنیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ کونسل کے قیام کا اعلان کیا

Tags: ·

تاریخ کے بدترین سیلاب سے دو کروڑ لوگ متاثر ہوئے ہیں ،سید یوسف رضا گیلانی

August 14th, 2010 · No Comments · پاکستان

وسیع پیمانے پر اس تباہی کا حکومتی وسائل سے مقابلہ ممکن نہیں ہے ، قوم کو دیرینہ مثالی جذبے کامظاہرہ کرنا ہوگا
متاثرین سیلاب کی مکمل بحالی تک چین سے بیٹھیں گے نہ ان کیلئے کوئی کسر اٹھا رکھیں گے
بھارت مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزی بند کرے ، تنازعات کی بنیادی وجہ مسئلہ کشمیر ہے
پاکستان عالمی امن میں کلیدی کردار ادا کررہا ہے ، خارجہ پالیسی میں قومی مفادات کے تحفظ کوکلیدی حیثیت حاصل ہے
وزیراعظم کا یوم آزادی کے موقع پر خطاب

اسلام آباد ‘ وزیراعظم سید یوسف رضا گیلانی نے واضح کیا ہے کہ پاکستان اوربھارت کے درمیان سب سے بڑا تنازعہ جموںو کشمیر کا مسئلہ ہے ۔ بھارت سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلا ف ورزی کو فوری طور پر روکے ۔ عالمی امن کے قیام میں پاکستان کا کلیدی کردار ہے ۔ ہماری خارجہ پالیسی کامرکزی نکتہ علاقائی و بین الاقوامی سطح پر پاکستان کے مفادات کا تحفظ اور فروغ ہے تاریخ کے بدترین سیلاب کی تباہ کاریوں سے دو کروڑ سے زائد لوگ متاثر ہوئے ہیں ۔ اربوں ڈالر کا نقصان ہوا ہے اتنی بڑی قدرتی آفت کا مقابلہ صرف حکومتی وسائل سے ممکن نہیں ہے ۔ آزمائش کا مقابلہ پوری قوم نے اپنے دیرینہ مثالی جذبے سے کرنا ہے جمہوری حکومت متاثرین سیلاب کی مکمل بحالی کیلئے کوئی کسر اٹھا نہیں رکھے گی۔یوم آزادی کے موقع پر سرکاری ٹی وی پر قوم سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہاکہ میں میں ساری قوم کو چونسٹھ ویں یومِ آزادی پر دل کی گہرائیوں سے مبارکباد پیش کرتا ہوں۔ قائداعظم محمد علی جناح کی قائدانہ صلاحیتوں، ہمارے بزرگوں کے پختہ ایمان، بہترین نظم اور مکمل اتحاد کی بدولت ہمیں ایک آزاد ملک حاصل ہوا۔ یہ مملکت پُرامن اور جمہوری جدوجہد کے ذریعے قائم ہوئی جس کی تاریخ میں کوئی نظیر نہیں ملتی۔ وزیراعظم نے کہا کہ اس دفعہ ہم یومِ آزادی رمضان کے مبارک مہینے میں منارہے ہیں۔ آپ کو یاد ہوگا کہ ہمیں آزادی کی نعمت رمضان المبارک کی سب سے باسعادت رات شب قدر کو حاصل ہوئی۔ یہ عجیب اتفاق ہے کہ اُس وقت قوم کو ہندوستان سے آنے والے لاکھوں مہاجرین کی دیکھ بھال کا مسئلہ درپیش تھا۔ اور آج غیرمعمولی بارشوں اور سیلاب کے نتیجے میں بے گھر ہونے والے لاکھوں متاثرین کی نگہداشت اور بحالی کی آزمائش کا سامنا ہے۔ اللہ تعالیٰ کے کرم سے اُس وقت بھی قوم نے حالات کا مقابلہ کیا اور انشا ء اللہ! اب بھی ہم اس امتحان میںسُرخرو ہوں گے۔ وزیراعظم نے کہا کہ حالیہ سیلابوں سے خیبر پختونخواہ ، بلوچستان، پنجاب، سندھ، آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان سمیت ملک کے بیشتر حصوں میں بڑی تباہی ہوئی ہے۔ سینکڑوں کی تعداد میں لوگ جاں بحق ہوئے۔ لاکھوں لوگ بے گھر ہوئے ، اربوں روپے مالیت کی فصلیں، سڑکیں ، پل ، نظامِ مواصلات اور عمارات کو نقصان پہنچا۔ مصیبت کی اس گھڑی میں ملک کی تمام سیاسی قیادت اور سرکاری ادارے متاثرین سیلاب کی تکالیف کو کم کرنے کے لیے دن رات کوشاں ہیں اور ہم سیلاب سے متاثرہ لوگوں کی مکمل بحالی کے لیے اپنے تمام تر وسائل بروکار لا رہے ہیں۔سیلاب کی تباہ کاریوں سے 1384 افراد جان بحق اور 1630 زخمی ہوئے۔ ابتدائی اندازے کے مطابق 7,23,950 مکانات کو نقصان پہنچا ہے۔ اس وقت بھی 57 ہیلی کاپٹرز اور 912 کشتیاں سیلاب میں پھنسے ہوئے لوگوں کو محفوظ مقامات تک پہنچانے میں مصروف ہیں۔ اب تک حکومت نے سیلاب میں پھنسے ہوئے تین لاکھ، 98 ہزار 390 افراد کو ہیلی کاپٹر ز اور کشتیوں کے ذریعے محفوظ مقامات تک پہنچایا ہے۔ آپ کو معلوم ہے کہ طوفانی بارشوں سے سب سے پہلے تباہی شمالی علاقہ جات، خیبر پختونخواہ اور بلوچستان میں ہوئی۔ اس لیے امدادی سرگرمیوں کا مرکز بھی یہی علاقے رہے۔ لیکن اب کیونکہ یہ سیلابی ریلا پنجاب اور سندھ کی جانب بڑھ چکا ہے۔ اس لیے امدادی سرگرمیوں کا رخ بھی ان علاقوں کی طرف کیا جارہا ہے۔ اس وقت تک ملک کے تمام صوبوں میں 95,053 ٹینٹ اور ایک لاکھ 80 ہزار 34 خوراک کے پیکٹ تقسیم کیے جاچکے ہیں۔ حکومت متاثرین کو 650 ٹن ادویات مہیا کر چکی ہے۔ اس کے علاوہ آرمی نے 901 ٹن تیار کھانا بھی متاثرین میں تقسیم کیا ہے۔ امدادی کاموں کی نگرانی کے لیے میں نے خود چاروں صوبوں کا دورہ کیا ہے اور متاثرین سے بھی ملا ہوں۔ تاکہ امدادی کاموں کو تیزرفتاری سے چلایا جاسکے۔ میں تمام وفاقی وزراء ، ممبرزپارلیمنٹ اور ممبرز صوبائی اسمبلیوں کو ہدایت جاری کردی ہے کہ وہ اپنے اپنے حلقوں میں امدادی سرگرمیوں کی نگرانی کریں۔ یہ حقیقت ہے کہ اتنی بڑی قدرتی آفت کا مقابلہ صرف حکومتی وسائل سے ممکن نہیں۔ اس آزمائش کا مقابلہ پوری قوم نے اسی جذبے سے کرنا ہے۔ جس کا مظاہرہ ہمارے اجداد نے قیامِ پاکستان کے وقت کیا تھا۔میں نے متاثرین سے اظہارِ یکجہتی کے طور پر اِس سال 14 اگست کی تمام سرکاری تقریبات کو منسوخ کردی تھیں ۔ اس کے علاوہ تمام سرکاری افطاریوں اور عید کی سرکاری تقریبات پر بھی پابندی عائد کردی ہے تاکہ تمام حکومتی وسائل کو سیلاب کے متاثرین پر خرچ کیا جاسکے۔ اس سب کاوش کے باوجود ابھی بھی ایسے لوگ ہوں گے جن تک شاید امداد نہ پہنچ سکی ہو۔ کیونکہ اس قدرتی آفت نے اتنے بڑے پیمانے پر تباہی مچائی ہے اوراس سے اندازاً 2کروڑ لوگ متاثر ہوئے ہیں۔ اس لیے حکومت کی تمام تر کوششوں کے باوجود مہیاکی گئی امداد ناکافی نظر آتی ہے۔ میں قوم کو یقین دلانا چاہتا ہوں کہ آپ کی جمہوری حکومت لوگوں کی مکمل بحالی کے لیے کوئی کسر اُٹھا نہ رکھے گی۔مجھے مکمل اعتماد ہے کہ ہمارے ملک کا ہر فرد خصوصاً اہلِ ثروت، سول سوسائٹی اور ہمارے نوجوان متاثرین کی دیکھ بھال اور بحالی کے عمل میں پورے جوش و خروش کے ساتھ شرکت کریںگے۔ اس موقع پر میں ایسے تمام افراد اور اداروں کا شکریہ ادا کرنا چاہوں گا جنہوں نے وزیراعظم فلڈ ریلیف فنڈ میں دل کھول کر عطیات دے۔ وزیراعظم نے کہا کہ کسی بھی ملک کا نظم و نسق درست کیے بغیر مسائل کا حل ممکن نہیں ہے۔ ترقی یافتہ اور خوشحال اقوام کے تجربے سے یہ پہلو واضح ہو جاتا ہے کہ قوائد اور ضوابط اور اداروں کاآئین کے دائرے میں رہ کر کام کرنا ترقی کی جانب پہلا قدم ہے۔ اس سمت میں تاریخی قدم 18ویں ترمیم کی منظوری ہے۔ جسے پارلمینٹ کے دونوں ایونوں نے مکمل اتفاق رائے سے منظور کیا۔ 1973؁ء کے آئین کی روح کے مطابق پارلمینٹ کی بالادستی قائم ہوچکی ہے۔ اب پارلمینٹ کے ارکان کا فرض ہے کہ آئین کے مطابق ہر شعبہ زندگی کی ترقی اور ترویج کے لیے ایسے قوانین بنائیں جس سے نظام زندگی بغیر کسی روکاوٹ کے چلتا رہے۔انہوں نے کہا کہ آپ کے علم میںہے کہ پچھلے تین چار سالوں سے عالمی معیشت تاریخ کے بدترین بحران سے گزر ر ہی ہے امریکہ، فرانس اور جاپان کی معیشتیں شدید مشکلات کا سامنا کر رہی ہیں۔ اس عالمی کسادبازاری کا ہماری معشیت پر بھی منفی اثر پڑا ہے۔ ملک میں ہونے والی دہشت گردی کی لہر اور سیلاب کی تباہ کاریوں نے ہماری مشکلات میں مزید اضافہ کیا ہے۔ جب ہم نے ملک کا انتظام سنبھالا، اس وقت افرطِزر 25فیصد کی سطح پر تھا اور سالانہ ترقی کی رفتار صرف 1.2فیصد تھی۔ ان حالات میں ہمیںکئی ناگزیر اور مشکل اقتصادی فیصلے کرنے پڑے۔ اس صورتِ حال سے نبٹنے کے لیے ہم نے دوست ملکوں کے تعاون سے فرینڈز آف ڈیمو کریٹک پاکستان کا فورم بنایا۔ لیکن جب دوست ممالک کی طرف سے اعلان کردہ امداد میں تاخیر ہوئی۔ تو ہمیں مجبورً IMFسے رجوع کرنا پڑا۔ تاکہ ملک کی بگڑتی ہوئی معیشت کوسنبھالا دیا جا سکے۔ اب اللہ کا شکر ہے کہ ہم نے دور رس معاشی اصلاحات اور سرکاری اخراجات میں کمی کرکے ملکی اقتصادی حالت کو استحکام کی طرف لے آئے ہیں۔ مجھے معلوم ہے کہ اشیاء کی قیمتوں میں اضافہ ہوا ہے۔ مگر آپ کو معلوم ہونا چاہیے کہ سالوں کی غفلت کا دنوں میں ازالہ ممکن نہیں۔ اس سال ہماری ترقی کی شرح 4.1فیصد تک پہنچ گئی ہے غیر ملکی زرِمبادلہ کے ذخائر 16۔ ارب ڈالر کی حد تک بڑھ گئے ہیں۔ بنکوں کے نظام میں اصلاح سے بیرون ملک پاکستانیوںکی طرف سے بھیجے جانے والی رقوم 8.5ارب ڈالر سے تجاوز کر چکی ہیں۔ صنعتی پیداوار میںخاطر خواہ اضافہ ہوا ہے۔وزیراعظم نے کہا کہ جیسا کہ میں نے بتایا ہے کہ عالمی حالات، دہشت گردی کے خلاف جنگ اور حالیہ سیلابوں کی تباہ کاری کی وجہ سے ملک ابھی مشکل دور سے مکمل طور پر باہر نہیں نکلا۔ اس بنا پر میں نے وزیرا عظم سیکریڑیٹ اور ایوان صدر کے اخراجات کو پچھلے سال کی حد پر منجمد کر دیا ہے۔ اپنی کابینہ کے وزراء کی تنخواہوں میں کمی کی ہے۔ ماسوائے ناگزیر ، دیگر تمام سرکاری بیرونی دوروں پر پابندئی عائد کر دی ہے ۔ میں نے تمام محکموں کو کفائیت شعاری کا حکم دیا ہے۔اور وزارت خزانہ کو کہا ہے کہ وہ تمام غیر ضروری اخراجات پر پابندی عائد کر دیں۔ میں نے صوبائی حکومتوں سے بھی درخواست کی ہے کہ وہ بھی سادگی اور کفائیت شعاری کو اپنائیں۔ وزارت خزانہ کو ہدایت کی گئی ہے کہ جن ترقیاتی منصوبوں پر 50فیصد سے زیادہ رقم خرچ ہو چکی ہے ان کو ترجیحی بنیادوں پر مکمل کیا جائے تاکہ ان کے فوائد عوام تک پہنچ سکیں ۔ آپ کی جمہوری حکومت نے پسماندہ علاقوں میں ترقیاتی منصوبوں کو ترجیحی بنیادوں پر شروع کروا رکھا ہے۔ بلوچستان کے دیرینہ احساس محرومی کو دور کرنے کے لیے آغاز حقوقِ بلوچستان منصوبہ شروع کیا ہے۔ اس سال بلوچستان کو سالانہ بجٹ میں پچھلے سال کے مقابلے میں دوگنا سے بھی زیادہ رقم مہیا کی گئی ہے۔ گلگت بلتستان میںبھی سیاسی اور انتظامی اصلاحات کی گئی ہیں۔ ہم نے تہیہ کررکھا ہے کہ حکومت قبائلی علاقوں میں بھی دہشت گردی کی جنگ ختم ہونے کے ساتھ ہی بڑے پیمانے پر سیاسی اصلاحات اور ترقیاتی منصوبے شروع کرے گی۔ موقع کی مناسبت سے میں عوام سے بھی چند گزارشات کرنا چاہتا ہوں۔ کیونکہ ملکی معیشت کو سنبھالا دینے کے لیے صرف حکومتی اقدامات کافی نہیں بلکہ عوامی تعاون بھی ناگزیر ہے۔ ملک کو توانائی کی کمی کا سامنا ہے ہمیں پیڑولیم کی ضروریات پوری کرنے کے لیے کثیر زرِمبادلہ خرچ کرنا پڑتا ہے۔ فیصلوںپرعمل سے 1500میگاواٹ کی فوری بچت ہوئی۔ آپکی جمہوری حکومت نے اس وقت تک بجلی کی پیداوار میں 1708میگاواٹ کا اضافہ کیا ہے دسمبر2010ئ؁ تک مزید 2795میگاواٹ کے منصوبے مکمل ہو جائیں گے ۔ جس سے بڑی حد تک بجلی کی کھپت اور پیدوار میں توازن آجائے گا۔ہماری کوشش ہے کہ 2020ئ؁ تک ملکی وسائل پر مبنی کم از کم 20,000میگاواٹ بجلی پیداکرنے کے لیے پروجیکٹ مکمل کیے جائیں۔اس ضمن میں مشترکہ مفادات کونسل نے دیا میربھاشا ڈیم کے منصوبے کی منظوری دے دی ہے اور جلد ہی اس منصوبے پر کام شروع ہوجائے گا۔ اس کے علاوہ تھرکول کے منصوبے پر بھی کام ہو رہا ہے مجھے امید ہے کہ ان تمام منصوبوں کی تکمیل کے بعد لمبے عرصے کے لیے پاکستان میں توانائی کا مسئلہ حل ہو جائے گا۔ میری عوام سے درخواست ہے کہ وہ توانائی کی بچت میں حکومتی اقدامات کا بھر پور ساتھ دیں۔ تاکہ ہم اپنے صنعتی اور کاروباری اداروں کی توانائی کی ضروریات کو آسانی سے پورا کر سکیں۔ وزیراعظم نے کہا کہ ملکی تاریخ میں پہلی دفعہ معاشرے کے نادار لوگوں کیلئے بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کے نام سے ایک سکیم شروع کی گئی ہے۔ اس سکیم کے تحت پچھلے سال46ارب روپے نادار اور بیواؤں کو دے گئے۔اس سال کے بجٹ میں 40لاکھ غریب خاندانوں کی مدد کے لیے 50ارب روپے مختص کیے ہیں۔ اس کے علاوہ ایسے یتیم اور بے سہارا بچے جن کے ماں اور باپ اس دنیا سے رخصت ہوگئے ہوںان کے لیے پاکستان سویٹ ہومز بنانے کی سکیم شروع کی گئی ہے۔ اس سلسلے میں ملک کے تمام شہروں میں 150سویٹ ہومز سنٹر تعمیر کیے جائیں گے اس وقت تک پاکستان بیت المال نے مختلف شہروں میں15 سویٹ ہومز سنٹر تعمیر کیے ہیں ۔ اِسی طرح ہم دیہاتوں کے بے روز گار نوجوانوں کے لیے بھی روزگار مہم شروع کر رہے ہیں ۔ ابتداء میں یہ سکیم ملک کی 120یونین کونسل میں شروع کی جارہی ہے ۔ اس تجربے کی کامیابی کے بعد اس سکیم کو ملک کے دیگر علاقوں تک پھیلا دیا جائے گا۔ میں بارہا کہہ چکا ہوں کہ خواتین اور اقلیتیں میرا حلقہ انتخاب ہیں۔ جمہوری حکومت خواتین کو برابر کے حقوق دلانے کے لیے کوشاں ہے۔ اور مجھے یقین ہے کہ مستقبل قریب میں ہماری خواتین ہر شعبہ زندگی میں اہم کردار ادا کریں گی۔ خواتین کے معاشی، سماجی اور سیاسی مقام کو معاشرے میں بلند کرنے کے لیے حکومت نے کئی اہم اقدامات کیے ہیں ۔ وفاقی اداروں میں خواتین کے کوٹے میں 5 سے10 فیصد اضافہ اور دیہی علاقوں میں بیواؤں کو سرکاری زمین کی الاٹمنٹ جیسے اقدامات شامل ہیں۔ وزیراعظم نے کہا کہ جمہوری معاشروں میں میڈیا کا کردار بہت اہم ہوتا ہے دیگر ریاستی اداروں کی طرح ہمارے ملک کا میڈیا بھی عبوری دور سے گزر رہا ہے۔ بعض لوگوں کو میڈیا کے رویے سے شکایات بھی ہوتی ہیں۔بلاشبہ اظہار رائے اور اظہارِ جذبات میں دوسروں کے احساسات کا خیال رکھاجائے تو اس سے معاشرے میں بہتری پیدا ہوتی ہے۔ ہماری حکومت قومی ترقی اور استحکام کے لیے میڈیا کی تنقید اور راہنمائی کو قدر کی نگاہ سے دیکھتی ہے۔ ہم میڈیا پر کسی قسم کی پابندی کے قائل نہیں۔وزیراعظم نے کہا کہ ہماری خارجہ پالیسی کا مرکزی نقطہ علاقائی اور بین الاقوامی سطح پر پاکستان کے مفادات کا تحفظ اور فروغ ہے۔ جمہوری پاکستان تمام بین الاقوامی ایوانوں میں اپنا موثر کردار ادا کر رہا ہے۔ عالمی امن کے قیام میں ہمارے ملک کاکلیدی کردار ہے۔ چین کے ساتھ دوستانہ تعلقات ہماری خارجہ پالیسی کا اہم ستون ہیں پاکستان کے چین کے ساتھ تعلقات انتہائی مستحکم اور وسیع بنیادوں پر استوار ہیں۔ اس وقت چین تعلیم ، ذرائع آمدورفت کی تعمیر، کان کنی، ذرائع مواصلات ، دفاع اور سیاحت کے شعبوں میں ہمارے ساتھ تعاون کر رہا ہے۔ پاکستان امریکہ کے ساتھ اپنے تعلقات کو بہت اہمیت دیتا ہے ۔ ان دو طرفہ تعلقات کو وسیع اور پائیدار بنیادوں پر استوار کرنے کے لیے دونوں ممالک نے Strategic Dialogueکا سلسلہ جاری ہے۔ امریکہ کے ساتھ توانائی کے شعبے سمیت دیگر کئی شعبوں میں تعاون پر بات چیت مثبت انداز میں آگے بڑھ رہی ہے۔پاکستان تمام ممالک کے ساتھ برابری اور باہمی احترام پر مبنی تعلقات استوار کرنا چاہتا ہے۔ ہم بھارت کے ساتھ تمام تنازات کو مذاکرات سے حل کرنا چاہتے ہیں۔ پاکستان اور بھارت کے درمیان سب سے بڑا تنازہ جموں و کشمیر کا مسئلہ ہے۔ ہم بھارت سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزی کو فوری طور پر روکے اور اس اہم مسئلے کو حل کرنے کے لئے مذاکرات کے عمل کو سنجیدگی سے آگے بڑھائے۔پاکستان کے تمام اسلامی ممالک کے ساتھ دوستانہ تعلقات ہیں ۔ ہم ان تعلقات کو مزید بہتر بنانے کی پالیسی پر گامزن ہیں۔ اس کے علاوہ حکومتِ پاکستان دیگر ممالک کے ساتھ بھی تجارتی روابط کو بہتر بنا رہی ہے جس سے ہمیں اپنی معیشت کو مستحکم کرنے میں مدد ملے گئی۔

Tags: ·

ارکان پارلیمنٹ کی ڈگریوں کی تصدیق کا عمل 4 ماہ کے لئے تاخیر کا شکار

August 13th, 2010 · No Comments · پاکستان

الیکشن کمیشن کو جلد آگاہ کیا جائے گا ‘ ذرائع ہائیر ایجوکیشن کمیشن
اسلام آباد۔ ارکان پارلیمنٹ کی ڈگریوں کی تصدیق کا عمل 4 ماہ کے لئے تاخیر کا شکار ہو گیا ہے اور ہائیر ایجوکیشن کمیشن اس تاخیر کے بارے میں جلد الیکشن کمیشن کو آگاہ کرے گا جبکہ سندھ یونیورسٹی نے ہائیر ایجوکیشن کمیشن سے کہا ہے کہ وہ ڈگریوں کی تصدیق کے لئے ارکان پارلیمنٹ سے خود تفصیلات مانگ لیں ۔ ایک نجی ٹی وی نے ایک ہائیر ایجوکیشن کمیشن کے ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ ارکان پارلیمنٹ کی ڈگریوں کی تصدیق کا کام مکمل ہوتا نظر نہیں آرہا، یونیورسٹیز کے پاس ریکارڈ ہی نہیں یا پھر انہوں نے اسے آکشن کردیا ہے، ایچ ای سی ذرائع کا کہنا ہے کہ تاخیر پر الیکشن کمیشن کو جلد آگاہ کیا جائے گا۔ہائر ایجوکیشن کمیشن کے ذرائع کے مطابق سندھ یونیورسٹی نے ایچ ای سی سے کہا ہے کہ وہ ڈگریوں سے متعلق ارکان پارلیمنٹ سے خود تفصیلات مانگ لیں۔ ایچ ای سی کا کہنا ہے کہ وہ کسی رکن پارلیمنٹ سے تفصیلات نہیں مانگیں گے، ہائر ایجوکیشن کمیشن کے ذرائع کا کہنا ہے کہ یونیورسٹیز کے پاس ڈگریوں سے متعلق ریکارڈ ہی نہیں یا پھر انہوں نے اسے آکشن کردیا ہے، جس کے بعد ڈگریوں کی تصدیق کے عمل میں مزید تین سے چار ماہ لگ سکتے ہیں، تاخیر کے بارے میں الیکشن کمیشن حکام کو جلد آگاہ کیا جائے گا۔

Tags: ·

پاکستان میں رمضان المبارک کا چاند نظر آ گیا ہے

August 11th, 2010 · No Comments · بریکنگ نیوز, پاکستان

اسلام آباد ‘ پاکستان میں رمضان المبارک کا چاند نظر آ گیا ہے ۔ کل بروز جمعرات پہلا روزہ ہو گا۔رمضان المبارک کا چاند سب سے پہلے کراچی میں نظر آیا ۔رویت ہلال کمیٹی کا اجلاس مفتی منیب الرحمن کی صدارت میں ابھی جاری ہے جو رمضان المبارک کے چاند نظر آنے کا سرکاری طور پر اعلان کرے گا۔ادارہ نیوز اردو ڈاٹ نیٹ کی جانب سے تمام مسلمانوں کو رمضان المبارک مبارک ہو

Tags: ··

عدالتوں کے اختیارات محدود کرتے رہے تو مارشل لاء لگتے رہیں گے۔چیف جسٹس

August 2nd, 2010 · 1 Comment · پاکستان

اٹھارہویں آئینی ترمیم کے خلاف وفاق کے وکیل کے دلائل مکمل
مزید سماعت کل منگل کو ہوگی
اسلام آباد ‘ ( نیوز اردو ڈاٹ نیٹ ) اٹھارہویں آئینی ترمیم کے خلاف درخواستوں کی سماعت کے دوران وفاق کے وکیل نے اپنے دلائل مکمل کر لئے ہیں ۔چیف جسٹس نے سماعت کے دوران کہا ہے کہ ججز تقرری کیلئے پارلیمانی کمیٹی صدر کو براہ راست اپنی سفارشارت کیسے بھیج سکتی ہے، عدالتوں کے اختیارات محدود کرتے رہے تو مارشل لاء لگتے رہیں گے۔عدالت عظمی کے سترہ رکنی لارجر بینچ کے روبرو دلائل مکمل کرتے ہوئے وفاق کے وکیل وسیم سجاد نے کہا کہ ججوں کے تقرر کیلئے پارلیمانی کمیٹی پارلیمنٹ سے الگ ہے۔ کمیٹی پارلیمنٹ کے نہیں آئین کے تحت بنائی گئی ہے۔

Tags: ·

سوات‘ نامعلوم مسلح افراد کی فائرنگ‘ 10سالہ بچی سمیت 3 افراد جاں بحق‘ 5 زخمی

July 26th, 2010 · No Comments · پاکستان

سوات ۔ 26 جولائی (اے پی پی ، نیوز اردو ڈاٹ نیٹ) سوات کے علاقہ منگلور کے موضع تاغوان میں نامعلوم مسلح افراد کی موٹر کا رپر فائرنگ کے نتیجہ میں 10 سالہ بچی سمیت 3 افراد جاں بحق ہوئے ہیں جبکہ ماں اور دو بچوں سمیت 5 افراد زخمی ہوئے ہیں، زخمیوں کو فوری طبی امداد کیلئے سیدو شریف ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے جہاں پر دو بچوں کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے۔ پولیس کے مطابق سوات کے مرکزی شہر مینگورہ سے چندکلومیٹر کے فاصلے پر واقع علاقہ منگلور کے موضع بیش بنڑ سے احسان اللہ ولد جہان بخت سکنہ بیش بنڑ اپنے اہلخانہ اور دیگر رشتہ داروں کے ہمراہ موٹر کار میں مینگورہ جا رہے تھے کہ طاغوان کے مقام پر پہلے سے گھات لگائے نامعلوم مسلح افراد نے گاڑی پر اندھادھند فائر کھول دیا جس کے نتیجہ میں احسان اللہ ولد جہان بخت ،ڈرائیور شرافت علی ولد شیر عالم اور ایک دس سالہ بچی الماس موقع پر جاں بحق ہوگئے جبکہ احسان اللہ کی اہلیہ مسماۃشبنم اور دو کمسن بچیاں آسماں اور الیبہ، مسماۃ ناہید زوجہ نواب علی اور ایک بچہ عابد علی ولد تاج محمد شدید زخمی ہو گئے، زخمیوں کو مقامی افراد نے فوری طبی امدا د کے لئے سیدو شریف ہسپتال منتقل کر دیا ہے جہاں پر دو بچوں کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے ملزمان جائے واردات سے فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے۔ واقعہ کے بعد سیکورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا قتل کی وجوہات فوری طور پر معلوم نہ ہوسکی ہیں تاہم مینگورہ پولیس نے نامعلوم ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کردی ہے بعد ازاں جاں بحق ہونے والے افراد کو آہوں اورسسکیوں کے ساتھ مقامی قبرستان میں سپردخاک کر دیا گیا۔

Tags: ·

لاہور کراچی میں لیبر میڈیکل کالجز قائم کئے جا رہے ہیں۔ وفاقی وزیر محنت و افرادی قوت سید خورشید احمد شاہ

July 25th, 2010 · No Comments · تعلیم و تربیت, پاکستان

سکھر میں 2 ارب روپے کی لاگت سے لیبر ہسپتال قائم کیا جائے گا،

سکھر ۔ 25 جولائی (اے پی پی ، نیوز اردو ڈاٹ نیٹ) سکھر میں 2 ارب روپے کی لاگت سے لیبر ہسپتال قائم کیا جا رہا ہے جو ریجن کا سب سے بڑا لیبر ہسپتال ہو گا جہاں محنت کش مزدورں کو طبی سہولیات حاصل ہوں گی جبکہ ہسپتال میں جدید ٹیکنالوجی کے مطابق طبی سہولیات میسر ہوں گی۔ اس بات کا اعلان وفاقی وزیر محنت و افرادی قوت سید خورشید احمد شاہ نے سکھر پریس کلب میں پیپلز لیبر بیورو کی جانب سے منعقدہ ’’لیبر کنونشن‘‘ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ ایک ماہ کے اندر سکھر میں لیبر کالونی اور لیبر ہال کا قیام بھی عمل میں لایا جائے گا جبکہ لاہور اور کراچی میں لیبر میڈیکل کالجز قائم کئے جا رہے ہیں جہاں محنت کشوں کے بچوں کو داخلہ دیا جائے گا۔

Tags: ·

پاکستان دشمن عناصر مسلکی اور نسلی منافرت کو ہوا دے رہے ہیں ‘معصوم شہریوں کو نشانہ بنانا جہاد نہیں بلکہ فساد ہے‘ گورنر خیبر پختونخوا اویس احمد غنی

July 25th, 2010 · No Comments · پاکستان

مہمند ایجنسی۔25جولائی(اے پی پی ، نیوز اردو ڈاٹ نیٹ)صوبہ خیبر پختونخوا کے گورنراویس احمدغنی نے کہاہے کہ پاکستان دشمن عناصر مسلکی اور نسلی منافرت کو ہوا دے رہے ہیں جبکہ معصوم شہریوں کو نشانہ بنانا جہاد نہیں بلکہ فساد ہے۔ان خیالات کااظہار انہوں نے اتوار کے روز اپنے پہلے دورہ مہمند ایجنسی کے دوران یکہ غنڈ کے دھماکوں میں شہید ہونے والے 84شہداء کے ورثاء اور 96زخمیوں میں تین کروڑ اڑتالیس لاکھ روپے کے امدادی چیک تقسیم کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔تقریب میں شہداء کے ورثاء کو تین ‘تین لاکھ روپے جبکہ زخمیوں میں ایک ‘ایک لاکھ روپے کے امدادی چیک تقسیم کیے گئے‘ گورنر نے تقریب سے اپنے خطاب میں کہاکہ پاکستان اسلامی دنیا کا واحد ایٹمی طاقت ہے اور اسلام دشمن عناصر پاکستان کو کمزور کرنے کیلئے پاکستان میں نسلی اور مسلکی منافرت کو ہوا دے رہے ہیں تاکہ پاکستان غیرمستحکم ہو اور اس کی معیشت تباہ ہوجائے۔ مگر قوم دہشت گردوں کیخلاف سیسہ پلائی ہوئی دیوار کی مانند کھڑی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ صرف اسلامی ممالک میں جاری جنگ وجدل ہمارے لیے ایک لمحہ فکریہ ہے ۔ انہوں نے کہاکہ دہشت گرد جہاد کا دعویٰ کرکے جہاد اور اسلام کو بدنام کررہے ہیں‘ انہوں نے کہاکہ ہم مانتے ہیں کہ ہمارے نظام میںقابل اصلاح خامیاں موجود ہیں مگر یہ جہاد کا جواز نہیں سانحہ یکہ غنڈ کے متاثرین کے ساتھ اظہار ہمدردی کرتے ہوئے گورنر نے کہاکہ وہ ان کے ساتھ اظہار یکجہتی کا اظہار کرنے کیلئے مہمند ایجنسی آئے ہیں اور اس عظیم دکھ درد میں ان کے ساتھ برابر کے شریک ہیں دہشت گردی کیخلاف قبائلیوں کے کردار کو سراہتے ہوئے اویس احمدغنی نے کہاکہ قبائلی اپنے خون کی قربانی دیکر پاکستان کی بقاء کی جنگ لڑرہے ہیں اور اس جنگ میں حکومت ان کو تنہا نہیں چھوڑے گی۔انہوں نے کہاکہ قبائلی علاقوں سے پسماندگی اور احساس محرومیت ختم کرنے کیلئے حکومت نے تعمیر وترقی کا منصوبہ تیار کیاہے جس پر عملدرآمد شروع ہوچکاہے ۔

Tags:

پرائیوٹ سکیم کے تحت حج درخواستیں جمع کروانے کی آخری تاریخ 16 اگست ہے‘ ڈائریکٹر حج

July 25th, 2010 · No Comments · پاکستان

حج کاارادہ رکھنے والے صرف وزارت مذہبی امور کے رجسٹرڈ شدہ 610 گروپ آرگنائزرز کے پاس ہی درخواستیںجمع کرائیں

لاہور۔25جولائی(اے پی پی ، نیوز اردو ڈاٹ نیٹ) ڈائریکٹر حج ملک محمد سلیم نے کہا ہے کہ پرائیوٹ سکیم کے تحت حج درخواستیں جمع کروانے کی آخری تاریخ 16 اگست ہے‘ حج کاارادہ رکھنے والے فراڈ سے بچنے کے لئے صرف وزارت مذہبی امور کے رجسٹرڈ شدہ 610 گروپ آرگنائزرز کے پاس ہی درخواستیںجمع کرائیں ۔ انہیں اپنے گروپ کی ویب سائٹ بناکر تمام ضروری معلومات واضح طور پر مہیا کرنے کے علاوہ حکومت کے منظور شدہ ڈیزائن کے مطابق سائن بورڈ اور وزارت کا اجازت نامہ اپنے دفاتر میں نمایاں طور پر آویزاں کرنے کی ہدایت کی گئی ہے ۔ گروپ آرگنائزر کو رقم کی ادائیگی چیک یا بینک ڈرافٹ کی شکل میں کی جائے ۔کسی غیر متعلقہ شخص‘ سب ایجنٹ یا ادارے کے پاس حج کے واجبات ہر گز جمع نہ کرائے جائیں۔ ایسے افراد سے ہوشیار رہیں جو گروپ آرگنائزر کے نام پر رقم وصول کرکے رفو چکر ہو جاتے ہیں۔ کسی فرد کے نام چیک نہ کاٹیں‘تمام تفصیلات اچھی طرح سمجھنے کے بعد گروپ آرگنائزر یعنی رجسٹرڈکمپنی کے نام چیک کی صورت میں ہی ادائیگی کریں۔ ادائیگی کے بعد باقاعدہ رسید حاصل کریں جس پرگروپ آرگنائزر کے دستخظ اور مہر بھی ہو۔ گروپ آرگنائزر کا پتہ اور فون نمبر اپنے پاس نوٹ کرلیں تاکہ وقتاً فو قتاً معلومات حاصل کرتے رہیں۔ حج گروپ کے بارے میں مزید تسلی کے لئے اپنے قریبی حاجی کیمپ سے گروپ آرگنائزر کے بارے میں تصدیق کی جا سکتی ہے۔ گزشتہ روز پرائیوٹ حج سکیم کے بارے میں عازمین حج کو ضروری معلومات د یتے ہوئے انہوں نے کہا کہ عازمین درخواست فارم اور رقم جمع کروانے سے قبل پیکج کی تفصیل معلوم کر لیں کہ ادا کی جانے والی رقم کے عوض انہیں کون کون سی سہولیات مہیا کی جائیں گی ۔ پیکیج کی تفصیل پر گروپ آرگنائزر کے دستخط اور مہر ہونا ضروری ہے ۔ یہ ضرور معلوم کر لیں کہ سعودی عرب میں قیام کی مدت کیا ہوگی ۔ رہائش گاہ مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں حرم شریف سے کتنے فاصلے پر ہوگی‘ عزیز یہ کے علاقے میں یاعزیزیہ کے بغیر‘ (عزیز یہ مکہ مکرمہ میں حرم شریف سے کافی فاصلے پر واقع ہے۔ گروپ آرگنائزر چند روز عزیز یہ میں قیام کے بعد حجاج کرام کو حج سے پہلے یا حج کے بعد حرم شریف کے قریب ہوٹل یا عمارت میں منتقل کر دیتے ہیں) یہ تفصیل جاننا بے حد ضروری ہے ۔ بعض گروپ آرگنائزر پیکیج میں کھانا بھی شامل کرتے ہیں ۔ عازمین کو معلوم ہونا چاہیے کہ پیکیج میں کھانا مکمل قیا م کے لئے ہوگا یاصرف منٰی کے پانچ ایام کے لئے ہوگا ۔اس کے علاوہ یہ بھی معلوم کر لیں کہ جہاز کا کرایہ کتنا ہوگا‘روانگی کے لئے ایئر لائن کی بکنگ براہ راست مدینہ منورہ کے لئے ہوگی یا جدہ کے لئے ہوگی۔ وطن واپسی کہاں سے ہوگی۔ منیٰ میں مکتب (معلم کے خیموں کا کیمپ)کون سا ہوگا۔جو مکتب جمرات یعنی شیطان کے قریب ہوتے ہیں وہ نسبتاً مہنگے ہوتے ہیں۔بعض گروپ آرگنائزر اپنے گروپ کے حجاج کو تحفے کے طور پر احرام، عبایا، سوٹ کیس ، دستی بیک وغیرہ میں سے کوئی چیز روانگی کے وقت دیتے ہیں۔ یہ معلومات بھی پہلے سے حاصل کرلیں تاکہ یہ اشیا آپ بازار سے نہ خریدیں۔ ٹرانسپورٹ کی نوعیت کیا ہوگی خصوصاً مشا عر یعنی منیٰ ، عرفات ، مزدلفہ کے لئے ٹرانسپورٹ کا انتظام کیا ہوگا۔ مدینہ منورہ جانے کے لئے معلم کی فراہم کردہ بس ہوگی یا پھر خصوصی بندوبست کے تحت پرائیوٹ کو سٹر وغیرہ فراہم کی جائیگی۔پیکیج قبول کرنے کی صورت میں پیکج کی تفصیل پر خود بھی دستخط کریںاور گروپ آرگنائزر سے بھی دستخط کرائیں۔گروپ آرگنائزر سے روانگی اور واپسی کی متوقع تاریخوں کے بارے میں بھی معلوم کرلیں ۔

Tags: ·

ایم ایس سی فزکس‘ پارٹ ون سالانہ امتحان 2010ء کا تیسرا پرچہ 2 اگست کو دوبارہ منعقد ہو گا

July 25th, 2010 · No Comments · تعلیم و تربیت, پاکستان

لاہور۔25جولائی(اے پی پی ، نیوز اردو ڈاٹ نیٹ) پنجاب یونیورسٹی شعبہ امتحانات کے زیر اہتمام منعقدہ ایم اے/ ایم یاس سی پارٹ ون سالانہ امتحان 2010ء میں شرکت کرنیوالے ایم ایس سی فزکس کے امیداوار کا تیسرا پرچہ (کوانٹم مکینکس) 2 اگست کو صبح 9 تا 12 بجے دوبارہ ہو گا جبکہ ان کا 30 جون کو لیا جانیوالا مذکورہ پرچہ منسوخ تصور کیا جائیگا۔ اس ضمن میں نوٹیفکیشن جاری کر دیا گیا ہے۔

Tags: ··

雪茄| 雪茄烟网购/雪茄网购| 雪茄专卖店| 古巴雪茄专卖网| 古巴雪茄价格| 雪茄价格| 雪茄怎么抽| 雪茄哪里买| 雪茄海淘| 古巴雪茄品牌| 推荐一个卖雪茄的网站| 非古雪茄| 陈年雪茄| 限量版雪茄| 高希霸| 帕特加斯d4| 保利华雪茄| 大卫杜夫雪茄| 蒙特雪茄| 好友雪茄

古巴雪茄品牌| 非古雪茄品牌

Addmotor electric bike shop

Beauties' Secret化妝及護膚品

DecorCollection歐洲傢俬| 傢俬/家俬/家私| 意大利傢俬/實木傢俬| 梳化| 意大利梳化/歐洲梳化| 餐桌/餐枱/餐檯| 餐椅| 電視櫃| 衣櫃| 床架| 茶几

Wycombe Abbey| 香港威雅學校| private school hong kong| English primary school Hong Kong| primary education| top schools in Hong Kong| best international schools hong kong| best primary schools in hong kong| school day| boarding school Hong Kong| 香港威雅國際學校| Wycombe Abbey School

邮件营销| 電郵推廣| edm营销| 邮件群发软件| 营销软件|